Pages - Menu

اتوار، 20 ستمبر، 2020

بورےوالا نے سٹی آف ایجوکیشن کا اعزاز برقرار رکھا

بورے والا: ڈویژنل پبلک سکول بورےوالا کی ہونہار طالبہ نورالہدی نے میٹرک کے سالانہ امتحانات میں 1100 میں سے 1092 نمبرز لے کر ملتان بورڈ میں مجموعی طور پر پہلی پوزیشن حاصل کر لی

اس موقع پر نورالہدی کا کہنا ہے کہ یہ سب میرے والدیں کی دعاوں اور قابل اساتذہ کی محنت کا ثمر ہے مزید کامیابیاں حاصل کرکے اپنے شہر کا نام روشن کروں گی اور ملک و قوم کی ترقی میں معاون بنوں گی
مکمل تحریر اور تبصرے>>

ساہوکا کے علاقہ میں زیادتی کا ایک اور کیس 16سالہ بچی سے زیادتی کا ملزم 10گھنٹے میں گرفتار

بورےوالا: ساہوکا کے علاقہ میں زیادتی کا ایک اور کیس 16سالہ بچی سے زیادتی کا ملزم 10گھنٹے میں گرفتار کر لیا گیا۔ 
تفصیلات کے مطابق پولیس تھانہ ساہوکا کو محمد انور نامی شخص کی طرف سے درخواست موصول ہوئی 

جس میں بتایا گیا کہ اس کی بیٹی (س) جس کی عمر15سال ہے اس کے ساتھ عابد نامی لڑکے نے زیادتی کی ہے جس پر پولیس نے فوری طور پرمقدمہ درج کر لیا گیا 

ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر وہاڑی احسان اللہ چوہان کی ہدایات پر ملزم کی گرفتاری کے لئے قائم مقام ایس ڈی پی او بوریوالا میڈم روبینہ عباس کی سربراہی میں ایس ایچ او تھانہ ساہوکا رائے محمد عارف پر مشتمل خصوصی ٹیم تشکیل دی گئی جنہوں نےجدید ٹیکنیکل ذرائع استعمال کرتے ہوئے ملزم عابد کو دریائے ستلج کے بیٹ سے 10گھنٹے میں بروقت رسپانس دیتے ہوئے گرفتار کر لیا 

اس موقع پر ڈی پی او وہاڑی احسان اللہ چوہان کا کہنا تھا کہ ضلع وہاڑی میں جنسی زیادتی کے خلاف زیرو ٹالرنس کی پولیسی اپنائی جا ئیگی اور اس میں ملوث سفاک ملزم کو جلداز جلد قانونی تقاضے مکمل کرکے سخت سے سخت سزا دلوائی جائے گی تاکہ وہ مستقبل میں ایسی حرکت سے باز رہے،
مکمل تحریر اور تبصرے>>

بورے والا ضلع بناؤ تحریک کے حوالہ سے پاکستان یوگا کونسل کے زیر اہتمام ریلی نکالی

بورے والا ضلع بناؤ تحریک کے حوالہ سے پاکستان یوگا کونسل کے زیر اہتمام ریلی نکالی گئی ۔ریلی میں کھلاڑیوں اور نمائندہ شخصیات نے شرکت کی، شرکاء نے ضلع بناو کے حوالہ سے  پلے کارڈز اور بینر اٹھا رکھے تھے

بورے والا ضلع بناو تحریک زور پکڑ گئی کھلاڑی بھی تحریک کے حق میں سڑکوں پر نکل آئے پاکستان یوگا کونسل کے مرکزی صدر ریاض یوگی کی قیادت میں قائد اعظم سٹیڈیم سے کھلاڑیوں اور نمائندہ شہریوں نے بورے والا کو ضلع بناو کے حوالے سے ایک ریلی نکالی

 ریلی کے شرکاء نے ضلع بناو کے حق میں پلے کارڈز اور بینر اٹھا رکھے تھے ریلی گول چوک پہنچ کر اختتام پذیر ہوئی جہاں مقررین نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ 15 لاکھ سے زائد آبادی کا یہ شہر ہر لحاظ سے ضلع کے معیار پر پورا اترتا ہے اور اگر اس شہر کو ضلع نہ بنایا گیا تو لاکھوں شہری سڑکوں پر آکر اپنا حق مانگنے پر مجبور ہونگے 

وزیر اعلی پنجاب فوری طور پر بورے والا کو ضلع بناو کر ساہیوال ڈویثرن میں شامل کرنے کا اعلان کریں ورنہ آئندہ بلدیاتی الیکشن میں یہ تحریک حکمران جماعت کی مخالفت میں تبدیل ہوجائے گی

مکمل تحریر اور تبصرے>>

ہفتہ، 19 ستمبر، 2020

سیشن عدالت نے چوہدری فقیر احمد آرائیں کی ضمانت کنفرم کر دی

بورے والا:  مسلم لیگ ں کے ایم این اے کی سرکاری زمین پر مبینہ قبضہ کے مقدمہ میں ضمانت کنفرم کر دی ۔ایم این اے چوہدری فقیر آرائیں کے خلاف محکمہ انہار کی اراضی پر قبضہ کے الزام میں مقدمہ درج ہے اس مقدمہ مقدمہ میں چوہدری فقیر آرائیں عبوری ضمانت پر تھے۔ ایڈیشنل سیشن جج نے عبوری ضمانت کنفرم کردی کمرہ عدالت کے باہر لیگی کارکنان کا رش تھا۔

مکمل تحریر اور تبصرے>>

دربار بابا حاجی شیر دیوان صاحب پر آئی خاتون سے 5 افراد کی اجتماعی زیادتی

بورے والا: دربار بابا حاجی شیر دیوان صاحب پر آئی خاتون سے 5 افراد کی یونین کونسل کے دفتر میں لے جاکر اجتماعی زیادتی کر ڈالی 

 پولیس نے اطلاع پر فوری کاروائی کرتے ہوئے پانچویں ملزمان کو گرفتار کر کے مقدمہ درج کر لیاہے

 تفصیلات کے مطابق فیصل آباد کی رہائشی خاتون جو کہ بورے والا کے نواحی علاقہ ساہوکا میں واقع دربار بابا حاجی شیر دیوان صاحب پر آئی تھی اسے پانچ ملزمان نے دربار سے زبردستی اغواء کر کے یونین کونسل کے بند دفتر کے کوارٹرمیں لے جاکر اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا 

پولیس کو 15 پر شہریوں کی جانب سے خاتون کی چیخ و پکار کی اطلاع ملی جس پر ساہوکا پولیس نے بروقت کارروائی کرتے ہوئے یونین کونسل کے سرکاری کوارٹرز پر چھاپہ مار کر پانچ ملزمان محمد صدیق،رشید، ممتاز، ظہیر اور علی رضا کو لڑکی سے اجتماعی زیادتی کرتے ہوئے گرفتار کر لیا اور لڑکی کو بھی بذریعہ لیڈیز اہلکار بازیاب کرا لیا اور میڈیکل کے لیے ہسپتال منتقل کر دیا گیا 

پولیس تھانہ ساہوکا نے ملزمان کو حراست میں لے کر مقدمہ درج کر کے مزید کارروائی کا آغاز کر دیا ہے پولیس ذرائع کے مطابق خاتون ذہنی طور پر معذور دکھائی دیتی ہے
مکمل تحریر اور تبصرے>>

جمعرات، 3 ستمبر، 2020

عدالت نے لیگی ایم این اے چوہدری فقیر آرائیں کی ضمانت قبل از گرفتاری منظور کر لی

بورے والا: عدالت نے لیگی ایم این اے چوہدری فقیر آرائیں کی ضمانت قبل از گرفتاری منظور کر لی, ضمانت کے لئ ئندہ تاریخ 
پیشی 19 ستمبر مقرر کردی, چوہدری فقیر آرائیں کے خلاف محکمہ انہار کی زمین پر قبضے کا مقدمہ درج ہوا
مکمل تحریر اور تبصرے>>

بدھ، 2 ستمبر، 2020

میرے خلاف جھوٹی ایف آئی درج کی گئی ہے ایم۔این اے چوہدری فقیر احمد آرائیں کا موقف


 

مکمل تحریر اور تبصرے>>

مسلم لیگ (ن) کے ایم این اے چوہدری فقیر آرائیں کے خلاف سرکاری جگہ پر قبضہ کے جرم میں مقدمہ درج

بورے والا: مسلم لیگ(ن) کے ایم این اے چوہدری فقیر آرائیں کے خلاف سرکاری جگہ پر قبضہ کے جرم میں مقدمہ درج، ایف آئی آر کے مطابق لیگی ایم این اے نے نواحی گاوں 108/ ای بی میں محکمہ انہار کی 7 کینال اراضی پر قبضہ کر رکھا ہے۔ ۔مقدمہ محکمہ انہار کے ایس ڈی او کی مدعیت میں درج کیا گیا ہے مقدمہ میں ایم این اے سمیت 11 افراد کے خلاف قبضے کا الزام ہے مسلم لیگ ن کے ایم این اے عرصہ دراز سے سرکاری اراضی پر فصل کاشت کررہے ہیں دوسری جانب ایم این اے چوہدری فقیر احمد آرائیں کا کہنا ہے کہ ایف آئی آر انتہائی غلط اور درست نہیں ہے۔ مقامی ایم پی اے کی زیر سرپرستی سرکاری زمین پر قبضہ کی نشاندہی پر پی ٹی آئی کی قیادت ذاتی مخالفت پر اتر آئی ہے۔ سرکاری زمین بالکل خالی پڑی ہے کس کے قبضہ میں نہ ہے۔ ہم نے اپنی ذاتی زمین لیز پر دی ہوئی ہے۔ 






مکمل تحریر اور تبصرے>>

اتوار، 14 اپریل، 2019

منشیات سمگلنگ کیس: بورےوالا کے رہائشی میاں بیوی کو سعودی عرب میں سر قلم کرکے موت کی سزا دے دی گئی



تحریر: محمد لطیف خلجی

بورے والا کے نواحی گاؤں 435 عتیق ٹاؤن چیچہ وطنی روڈ کا رہائشی غلام مصطفیٰ عرف ٹولی اپنی بیوی ، ایک بیٹا اور ایک بیٹی کے ساتھ رہائش پذیر تھا۔اسی علاقہ میں بالے کے ہوٹل کے سامنے والی گلی میں وسیم نامی ایک شخص رہتا تھا جو کردار کے حساب سے کوئی مناسب شخص نہ تھا اوراس کا محلہ میں عیسائی لڑکی کے ساتھ شادی اور پھر دھوکہ دہی کا معاملہ بھی رہا ہے وسیم بنیادی طور پر پاکستان کے کسی بڑے ڈرگ سمگلنگ گینگ کے لیے کام کرتا تھااور اسی بااثر گینگ کے لیے بھولے ، شریف اور سادہ لوح لوگوں کو عمرہ پر انتہائی سستے پیکج کے تحت لے جانے کی آڑ میں ایفی ڈرین کیپسول (منشیات) سمگل کروانے کے لیےایسے ہی ضرورت لاچار اور غربا کو ڈھونڈھ کر اپنی ٹیم میں لاتا تھا ۔اسی سلسلہ میں وسیم نے مصطفیٰ عرف ٹولی کے سالے کو بھی ایک کامیاب کیپسول سمگل ٹور لگوا چکا تھا۔ 
 
انتہائی شریف ،ملنسار محنت کش غلام مصطفیٰ عرف ٹولی اپنے سالے اور وسیم کی لچھے دار گفتگو میں آ گیا اور لالچ نے اسے اندھا کر دیا ۔۔ہاۓ رے غربت ۔۔۔ تو نے کہیں کا نہ چھوڑا جس شخص نے کبھی پچاس ہزار کی کمیٹی نہ ڈالی ہو اس کے لیے پچاس لاکھ کی رقم بہت معنی رکھتی تھیاور ساتھ پوری فیملی کو عمرہ کی 5 سٹار سعادت بھی اور ساتھ جان کے تحفظ کا پورا یقین بھی ایسی صورت حال میں غریب آدمی کیسے انکار کر سکتا تھا ۔۔۔مشہور قول ہےکہ غربت انسان کو کفر تک لے جاتی ہے ۔غلام مصطفیٰ عرف ٹولی کے سامنے اپنے سالے کے سامنے کامیاب ٹور کی مثال موجود تھی اس لیے وہ اس خوف ناک جرم پر بلکل بھی نہیں گھبرایا ۔غلام مصطفیٰ عرف ٹولی نے عمرہ کی سعادت کو اپنے اہل محلہ سے پوشیدہ رکھا خاص دوستوں کو بس یہی بتایا کہ وہ بہت جلد بہت امیر ہونے والا ہے ۔



غلام مصطفیٰ عرف ٹولی

2016 کے رمضان المبارک میں وسیم اور اس کے ڈرگ گینگ نےان میاں بیوی کو ایفی ڈرین کے کیپسول (منشیات) نگلوا کر پیٹ میں محفوظ کروائے ۔اور ملتان ایئر پورٹ سے باحفاظت وہاں سے کلئیر کروایا ۔جس سے ان میاں بیوی کو وسیم اور ان کے باس کے طاقتور ہونے اور سفر کے محفوظ ہونے کا یقین اور بڑھ گیا ۔جب ان میاں بیوی کو ایفی ڈرین کے کیپسول نگلوائے گئے تھے تب ان کوہدایت دی گئی تھی کہ آپ نے جہاز میں ریفریشمنٹ نہیں لینی ،،، بس ٹولی سے یہی حماقت ہوئی ۔۔۔اس نے ریفریشمنٹ تو نہ لی مگر دو بار کولڈ ڈرنک پی لی۔ یہی کولڈ ڈرنک اس کے لیے موت کا پروانہ بن گئی جب یہ لوگ جدہ ایئر پورٹ پر اترے ۔تو وہاں کی ڈرگ سمگل ٹیم نے ان کو وہاں ایئر پورٹ سے بھی کلئیر کروا دیا تھا ۔قدرت کو کچھ اورہی منظور تھا ۔مگر تب تک کولڈ ڈرنک میں موجود گیس اور کیمیکل نے پیٹ میں کیپسول کو بری طرح متاثر کر دیا تھا ۔جس کی وجہ سے غلام مصطفیٰ عرف ٹولی ایئر پورٹ سے نکلنےہی والا تھا کہ اسے ایئر پورٹ کے ویٹنگ ایریا میں قے ( الٹی) آ گئی ،اور اس میں کچھ کیپسول قے سے باہر فرش پر گر گئے جس کی بنیاد پر شک گزرنے پر پولیس (شُرتے) ان دونوں کو اپنی حراست میں ہسپتال لے گئے جہاں باقی سارا انکشاف ہوا۔


غلام مصطفیٰ کے ساتھ جانے والی ان کی بیٹی کو فوری ڈی پورٹ کر دیا گیا اور میاں بیوی پر مقدمہ درج کر دیا گیا غلام مصطفیٰ کی باقی فیملی کو وسیم یقین دلاتا رہا کہ ان کا باس ان دونوں کو بہت جلد رہا کروا دے گا آپ نے کسی نے کوئی بات نہیں کرنی ۔گھبرانا نہیں ۔غلام مصطفیٰ کے والدین اور بہن بھائیوں کو یقین تھا کہ وسیم ان دونوں کو ضرور چھڑوا لے گا ، اس لیے انہوں نے بھی کسی کو کچھ نہ بتایا ایک ماہ قبل جب سعودیہ عدالت نے ان میاں بیوی کے " ڈیتھ وارنٹ" جاری کیے تب سے وسیم اس محلہ کو چھوڑ کر مفرورہو گیا ۔12 اپریل 2019 کو ان میاں بیوی کو نماز جمعہ کے بعد جدہ کی جامع مسجد کے باہر پاکستانی وقت کے مطابق 4:00 بجے سر قلم کرکے موت کی سزا دے دی گئی اور میتوں کی وہاں ہی تدفین کر دی گئی ۔۔۔
میری رائے میں وسیم خوف میں اپنے باس کے پاس پناہ لے گا اور باس اس کو قتل کر دے گا ، جیسے فلموں میں ہوتا ہے ۔۔



مبینہ ملزم وسیم


نہ رہے گا بانس نہ بجے گی بانسری
زندگی میں جتنا آپ کے پاس ہے ،
اسی پر صبر شکر کے ساتھ جینا سیکھو
رب کے تھوڑے دیے پر زمین پر خوش رہو
رب کریم روز محشر آپ کے تھوڑے عمال پر خوش ہو گا


مکمل تحریر اور تبصرے>>

جمعہ، 21 دسمبر، 2018

خاتون اور اس کی دو بیٹیوں کو غیر قانونی طور دو دن تھانہ گگو منڈی میں محبوس رکھنے پر پولیس اہلکاران کے خلاف مقدمہ

بورے والا: ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر وہاڑی محمد عاطف اکرام نے تحصیل بورے والا میں خاتون اور اس کی دو بیٹیوں کو غیر قانونی طور دو دن تھانہ گگو منڈی میں محبوس رکھنے کے واقعہ کا نوٹس لیتے ہوئے پولیس ملازمین کے خلاف اختیارات کا ناجائز استعمال کرنے پر چھاپہ مار نے والی پوری پولیس پارٹی کے خلاف پولیس آرڈر 155 سی اور 342 ت پ کے تحت تھانہ گگومنڈی مقدمہ کر کے درج کرنے کا حکم دیا ہے 

ڈی پی او وہاڑی نے  ابتدائی انکوائری رپورٹ کی روشنی میں ایس ایچ او تھانہ گگو منڈی انسپکٹر شاہد اسحاق، اے ایس آئی عباس علی، کنسٹیبلان وقاص، یسین، آصف خان اور افضال کو معطل کر کے لائن حاضر کر دیا جبکہ ڈی ایس پی صدر محمد خالد جوئیہ کو انکوائری افسر مکمل کر کےجلد رپورٹ جمع کروانے کی ہدایات بھی جاری کر دیں ہیں ۔

پولیس افسران کے خلاف کاروائی کرتے ہوئے
بورےوالا کے نواحی گاؤں 277 ای بی میں آرمی کے متوفی لانس نائیک نور حسن کی بیوہ اور اس کی دو بیٹیوں کو دو دن تھانہ گگو منڈی چوری کے مقدمہ میں غیر قانونی طور پر محبوس رکھنے پر کی گئی۔ بشیراں بی بی نے صحافیوں کو بتایا کہ بااثر ملزمان نے اس کے بیٹوں کے خلاف ایک شخص صوبیدار منظور احمد کی مدعیت میں بچھڑا چوری کا جھوٹا مقدمہ درج کروایا اور بعد ازاں ملزمان پولیس کی مدد سے اس کے گھر کی دیوار گرا کر اس کے ذاتی مال مویشی بھی اپنے ساتھ لے گئے

گگومنڈی پولیس نے بشیراں بی بی اور اس کی دو نوجوان بیٹیوں کو لیڈی پولیس اہلکار کے بغیر گرفتار کرکےدو روز تھانہ مین بند رکھا بشیراں بی بی نے اعلیٰ حکام سے پولیس اورملزمان کےخلاف کاروائی کی درخواست کی تھی دوسری جانب ریجنل پولیس آفیسر وسیم خان نے بھی واقعہ کا نوٹس لیتے ہوئے ڈی پی او وہاڑی عاطف اکرام سے رپورٹ طلب کر لی ہے ۔
مکمل تحریر اور تبصرے>>